Monday, February 26, 2024
Homeاسلامنعت شریفآنے والو یہ تو بتاؤ شہر مدینہ کیسا ہے

آنے والو یہ تو بتاؤ شہر مدینہ کیسا ہے

Anay walo yeh to batao shehar madinah kaisa hai

آنے والو یہ تو بتاؤ شہر مدینہ کیسا ہے

آنے والو یہ تو بتاؤ شہر مدینہ کیسا ہے

سر ُان کے قدموں میں رکھ کر جھک کر جینا کیسا ہے

گنبد خضریٰ کے سائے میں بیٹھ کر تم تو آئے ہو

اِس سائے میں رب کے آگے سجدہ کرنا کیسا ہے

دل آنکھیں اور روح تمہاری لگتی ہیں سیراب مجھے

اُن کے در پہ بیٹھ کے آب زم زم پینا کیسا ہے

دیوانوں آنکھوں سے تمہاری اِتنا پوچھ تو لینے دو

وقت دعا روضے پہ اُن کے آنسو بہانا کیسا ہے

اے جنت کے حقدارو مجھ منگتے کو یہ بتلاؤ

اُن کی سخا سے دامن کو بھر کر آنا کیسا ہے

لگ جاؤ سینے سے میرے طیبہ سے تم آئے ہو

دیکھ لوں میں بھی آپ کو اب یہ دوری سہنا کیسا ہے

وقت رخصت دل کو اپنے چھوڑ وہاں تم آئے ہو

یہ بتلاؤ عشرت اُن کے گھر سے بچھڑنا کیسا ہے

 

Aanay Walo Ye Tou Batao Shehar-E-Madina Kaisa Hai – Naat Lyrics In Urdu

Aanay Walo Ye Tou Batao Shehar-E-Madina Kaisa Hai
Sar Un Kay Qadmon Mein Rakh Kar Jukh Kar Jeena Kaisa Hai

Gumbaday Khazra Ke Sa’aye Mein Baith Kay Tum To Aaye Ho
Uss Sa-Ay Mayn Rabb Kay Aagay Sajda Karna Kaisa Hai

Dil Aankhayn Or Ruuh Tumhari Lagti Heyn Sehraab Mujhay
Dar Pay Un Kay Beytth Kay Zamzam Piina Kaisa Hai

Diwano Ankhon Say Tumharitna Puuch To Laynay Do
Waqt E Dua Rozay Pay Un Kay Aansu Bahana Kaisa Hai

Waqt E Rukhsat Dil Ko Apnay Chhoar Wahan Tum Aaye Ho
Yay Batlaa-O Ishrat Un Kay Dar Say Bichharrna Kaisa Hai

Aanay Walo Ye Tou Batao Shehar-E-Madina Kaisa Hai
Sar Un Kay Qadmon Mein Rakh Kar Jukh Kar Jeena Kaisa Hai

متعلقہ مضامین

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

متعلقہ