نعت شریف

اللہ نے پہنچایا سرکار کے قدموں میں

اللہ نے پہنچایا سرکار کے قدموں میں

 

اللہ نے پہنچایا سرکار کے قدموں میں

صد شکر میں پھر آیا سرکار کے قدموں میں

 

کچھ دیر سلامی کو ٹھہرایا مواجہ پر

پھر مجھ کو ادب لایا سرکار کے قدموں میں

 

رد کیسے بھلا ہو گی اب کوئی دُعا میری

میں رب کو پکار آیا سرکار کے قدموں میں

 

کچھ لمحے حضوری کے پائے تو یہ لگتا ہے

اک عمر گزار آیا سرکار کے قدموں میں

 

کچھ کہنے سے پہلے ہی پوری ہوئی ہر خواہش

جو سوچا وہی پایا سرکار کے قدموں میں

 

سرکار سلامی کو ہر سال طلب کیجے

یہ عرض بھی کر آیا سرکار کے قدموں میں

 

یاد آئی صبیحؔ اپنی ہر ایک خطا مجھ کو

اعمال پہ شرمایا، سرکار کے قدموں میں

Allah Ne Pohnchaya Sarkar Ke Qadmon Mein Lyrics

Allah Ne Pohnchaya Sarkar Ke Qadmon Mein
Sud Shukar Keh Mein Phir Aaya Sarkaar Ke Qadmon Mein

Rud Kaisay Bhala Hogi Ab Koi Dua Meri
Mein Rub Ko Pukar Aaya Sarkar Ke Qadmon Mein

Kuch Kehne Se Pehle Hee Puri Hoi Har Khuwahish
Jo Socha Wohi Paaya Sarkaar Ke Qadmon Mein

Kuch Lamhay Huzoori Ke Paaye Tou Ye Lagta Hai
Ik Umar Guzaar Aaya Sarkar Ke Qadmon Mein

Mujh Jaisa Tahee Damaan Kiya Nazar Ko Lejaata
Ik Naat Suna Aaya Sarkaar Ke Qadmon Mein

Yaad Aayei Sabih Apni Har Aik Khata Mujh Ko
Amaal Pe Sharmaaya Sarkaar Ke Qadmon Mein

Allah Ne Pohnchaya Sarkar Ke Qadmon Mein
Sud Shukar Keh Mein Phir Aaya Sarkaar Ke Qadmon Mein

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button