Keyword Density 121

کی ورڈ ڈینسٹی

کی ورڈ ڈینسٹی Keyword Density
—————–

کی ورڈ ڈینسٹی اصل میں کی ورڈ کی مقدار کو کہتے ہیں کہ ایک ارٹیکل میں کی ورڈ ڈینسٹی کتنی ہونی چاہیے، عام طور پر کی ورڈ ڈینسٹی 3 فیصد آخری حد کہہ سکتے لیکن بہترن 2 سے 2 عشاریہ 5 ہے اورگوگل اسکو بہترین سمجھتا ہے
فرض کریں 500 ورڈز کا ارٹیکل ہے تو آپ 15 بار اپنا کی ورڈ استعمال کرسکتے
اگر لانگ ٹیل کی ورڈ ہے تو اسکی ایک دو بار ہی استعمال کریں تو بہتر ہے اور باقی کئ حصوں کو 2 یا 3 فیصد تک استمال کر سکتے
اور سرچ انجن اسکو بہتر سمجھتا ہے اور بین نہیں کرتا اور نہ کوئی پینلٹی لگاتا نہ اسکی رینکنگ کم کرتا ہے یعنی کی ورڈ ڈینسٹی کی آخری حد 3 فیصد اور لیکن بہترین 1 سے 2 فیصد ہے 3 فیصد سے اوپر جانے پر آپ کو پینلٹیز کا سامنا ہو سکتا اور بین ببی ہو سکتے اور رینکنگ

کی ورڈ ڈینسٹی سے مراد ایک مخصوص کی ورڈ یا “فریز” کسی آرٹیکل میں کتنی بار استعمال ہوئے اور انکا آرٹیکل کے تمام الفاظ کے مقابلے میں کیا ایوریج یا تناسب ہے
فرض کریں ایک آرٹیکل 500 الفاظ کا ہے اور اگر ایک کی ورڈ 500 الفاظ میں سے 15 بار استعمال ہوا تو اسکی 500 الفاظ کے مقابلے میں کا ایوریج بنی گی
ایک زمانے میں “کی ورڈ ڈینسٹی” کو رینکنگ فیکٹر میں ایک اہم فیکٹر مانا جاتا تھا بعد میں سرچ انجنز نے دوسرے فیٹرز کو زیادہ اہمیت دینا شروع کر دی
کسی کی ورڈ کی “کی ورڈ ڈینسٹی” ایس ای آو کے معیار کے مطابق ارٹیکل میں 2 یا 3 فیصد ہونا چاہیے اس سے زیادہ ہونے پر “سرچ سپیم” بھی ہو سکتا

Keyword Frequency کی ورڈ فریکوائنسی

کی ورڈ فریکوائنسی سے مراد یہ ہے کہ ایک کی ورڈ کتنی بار کسی ویب پیج میں استعمال ہوا ہے، اس کے پیچھے راز یہ ہے کہ ایک کی ورڈ جو بار بار ایک ویب پیج میں استعمال ہو رہا اسکا کتنا قریب ریلیشن اس ویب سائیٹ سے بنتا لیکن اس حد زیادہ ایک ” فریز یا کی ورڈ” کا استعمال کرنا ویب سائیٹ پر سرچ اجنز کی نظر میں منفی اثر ڈالتا

Keyword Prominence کی ورڈ پرومیننس

کی ورڈ پرومیننس سے مراد یہ ہے کہ کونسے کی ورڈ آپ کی ویب سائیٹ میں نمایاں ہیں اور انکو کیا اہمیت حاصل ہے عام طور پر اہم کی ورڈز کو جملے کے شروع میں پیراگراف کےشروع میں اورویب ییج کی شروعات میں اور ٹائٹیل و میٹا ٹیگز میں استمعال کیا جاتا

کی ورڈ پرامینس سے مراد کی ورڈ کی پلیسمنٹ کیسی ہے یا آپ کی ورڈ کہاں استعمال کر رہے ہیں
کی ورڈ استعمال کرنےکی جگہ آپ کے پاس آرٹیکل ہوتاہے، ٹائیٹل ہوتا ہے ڈسکرپشن ہوتا ہے، پرمالنک ہوتا ہے ہیٹنگز ہوتی ہیں امیجز ہوتی ہیں
اگر ویب ماسٹر ان جہگوں پر اپنا کی ورڈ استعمال نہیں کرتا تواسکی کی ورڈ پرامینس ” لو”‌ہے اور اگر ان جگہوں پر وہ کی ورڈ سہی پلیس کر رہا ہے تو اسکی کی ورڈ پرامینس اچھی ہے ٹھیک ہے اس کی بھی اپنی پرسنٹیج ہوتی ہے

کی ورڈ سٹفنگ Keyword stuffing

جب ایک یا ایک سے زیادہ کی ورڈ کو ایک معیار سے زیادہ بار آرٹیکل میں استعمال کیا جائے تو اسے کی ورڈ سٹفنگ کہتے ہیں، اس ٹیکنیک میں میٹآ ٹیگز اور ویب کنٹینٹ کو مخصوس کی ورڈ سے بھر دیا جاتا ہے لیکن ایسا کرنے سے سرچ انجنز آپ کی وئب سائیٹ کو ” ویب سپیم” یا “سپیم ڈیکسنگ” کے الزام میں گوگل اور دوسری سرچ انجنز کی جانبسے پابندی کا خطرہ ہو سکتا ہے

کی ورڈ پراکسیمیٹی Keyword Proximity

کی ورڈز کے درمیاں کے وقفے کو کی ورڈ پراکسیمیٹی کہتے ہیں یا دو کی ورڈ ایک جملے میں ایک دوسرے کے کتنے قریب ہیں جتنا آپ اپنے اہم کی ورڈز کو جملے میں قریب استعمال کریں گے وہ سرچ انجنز کی نطر میں اتنی اہمیت کا حامل ہوگا

کی ورڈ پراکسیمیٹی سے مراد آپ کے کی ورڈ کہاں پلیس کرتے اور ان میں فاصلہ کتنا ہے  جیسے
دو جملوں میں اگر ہمارا کی ورڈ ہے تو دوسرے جملے میں اس کی ورڈ کا فاصلہ زیادہ ہے اور کی ورڈ پراکسیمیٹی کی پرسنٹیج لو ہے
اگر آپ کی ورڈ پراکسیمیٹی 80 فیصد سے کم ہو گئی تو ایس ای آو کی نظر میں یہ اچھا نہیں سمجھا جائے گا ایسے ہی کی ورڈ پراکسیمیٹی کو ہر جگہ دیکھنا چاہئے یہاں تک کہ پرما لنک تو کی کی ورڈ پراکسیمیٹی اچھی ہونی چاہیے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں