meta tag optimization 44

ویب سائیٹ کی ٹیگ آپٹیمائزیشن کیسے کی جائے

ٹیگ آپٹیمائزیشن

آج بات ہو گئی ٹیگ آپٹیمائزیشن پر

HTML TAGS ایج ٹی ایم ایل ٹیگز
—————–
HTML کو پورا لکھیں تو Hypertext Markup Language لکھا جائے گا یہ ویب سائیٹ کا سٹریکچر بنانے کے لئے استعمال ہوتی ہے، سرچ انجن HTML TAGS کو کرال کرتا ہے لیکن یہ ٹیگز یوزرز کو شو نہیں ہوتے، اگر آپ کسی ویب سائیٹ کی انڈیکسنگ کرنی ہے تو آپ HTML TAGS کے ذریعے ایسا کر سکتے ہیں لیکن ہم “ایس ای آؤ” میں ہم ویب پیج کو آپٹیمائز کرتے ہیں نہ کہ ڈیویلپ
چلیں شروع کرتے ہیں
“ایس ای آؤ” میں ہم نے وہ کی ورڈز کا استعمال کرنے جو ہم نے ایک خاص طریقے سے کی ورڈ ایڈ ورڈ ٹول کے ذریعے سلیکٹ کئے تھے اس سے ہماری ویب سائیٹ کی انڈیکسنگ سرچ انجنز میں جلد ہو گئ اور ریکنگ پر بھی اچھا اثر پڑے گا
اگر ہم کسی ویب سائیٹ کا ویو سورس دیکھیں تو تو HTML کی کوڈنگ دو حصوں میں تقسیم کی گئی وہتی ہے ایک ہیڈ پارٹ اور دوسرا باڈی پارٹ، دونوں ہی پارٹ میں HTML ٹیگز کا آپٹیمیائزیشن کیا جاتا ہے
ھیڈ پارٹ میں ، ٹائیٹل، میٹا کی ورڈ، میٹا ڈسکرپشن اور لینگویج، فیو ایکون، اور
باڈی پارٹ میں ہیڈنگ ٹیکسٹ، بولڈ ٹیکٹس اور الٹ ٹیکسٹ کا استعمال کیا گیا ہے
ٹائیٹل
——–
اس میں ہم پیج کا نام، پھر جس پر سب سے زیادہ ٹریفک ہو وہ کی ورڈ اورجس کی ورڈ کو ہم نے سب سے زیادہ اہمیت دینی وہ استعمال کرسکتے، یہ سب پائپ لائن سے الگ کئے جا سکتے اسکے علاوہ کاماز سے بھی الگ لکھے جا سکتے۔،
ٹائیٹل 70 الفاظ میں لکھنا بہتر رہتا ( سپیسز بھی شامل ہوتیں) ٹائیل کا ہر حصہ کامز سے ایک کیا جاتا یا پائپ لائن اس الگ ظاہر کیا جاتا
——————
میٹا کی ورڈز
————
وہ پیچ جسکو آپ اپٹیمائیز کرہے ہوں اس میں جنتے بھی اہم کی ورڈز ہوں گے اس میں استمعال کئے جاتے ارو انکو کاماز لگا کر الگ الگ لکھا جاتا
میٹا کی ورڈز میں ،140 الفاظ تک لکھ سکتے اور انکو کامز سے الگ الگ لکھا جاتا
میٹا ڈسکرپشن
————–
میٹا ڈسکرپشن میں دو تین لائنز کا ایسا ڈسکرپشن لکھنا ہوتا جس اس پیج کے بارے میں بتا رہا ہوتا اس ساتھ ہی وہ اہم کی ورڈز بھی لکھنا ہوتا اور ویب سائیٹ کا نام بھی اس میں شامل کیاجاتا
میٹا ڈسکرپشن میں ،140 الفاظ تک لکھ سکتے
لینگوئج
————
جس بھی زبان میں اپ کی وبب سائیٹ ہو اس زبان کا حوالہ دینا ضروری ہوتا ہے
فیو ایکن
———
ایک کو ایک کوڈ کے ذریعے ظاہر کیا جاتا ہے
اسکے بار باری آتی ہے باڈی پارٹس کی
———————————————-
ہیڈنگز
———
ایچ ون

———
باڈی پارٹس میں ہیڈنگ ٹیکٹس بہت ہی اہم ہے اسکو ہم

کے ذریعے باڈی پارٹ میں لکھتے ہیں
یہ ایک پیچ میں ایک بار استعمال کرنا بہتر ہے
ایج ٹو

———
اس کے بعد جو دوسرے نمبر پر ایم کی ورڈ ہوتا ہے اس کو ہم

کے ذریعے باڈی پارٹ میں لکھتے
یہ ایک پیچ پر دو بار سے زیادہ استعمال نہ کریں

——
اس کے علاوہ دوسرے اہم کی ورڈز کو ہم کے ذریعے ویب پیچ پر لکھتے ایک پیج پر کم از کم دو ٹیکسٹ استعمال کریں

آلٹ ٹیگز
——
آپ جانتے ہوں گے کرالر امیجز یا نان انڈیکس ایبل ایٹری بیوٹ کو نہیں پڑھتے اس کے لئے ہم ٹیگ کا استعمال کرتے
اس میں ایک بات خاص طور پر یاد رکھنی جاہیئے الٹ ٹیگز میں و ضرورت سے زیادہ کی ورڈز استعمال کریں گے تو ہماری ویب سائیٹ کو سرچ انجنز منفی اندازسے لیں گے اور ہو سکتا ہے کی ورڈ سٹفنگ کی وجہ سے آپ کی سائیٹ بلیک لسٹ ہو جائے اس لئے الٹ ٹیگز میں کوشش کریں وہ کی ورڈز استعمال کریں جو امیج کے بارے میں بتا رہے ہوں
ہاپر لنکس Hyper link
——————–
اس کی لمٹ 70 الفاظ ہے، اگر اپ نے ہائیرلنک میں دو الفاظ کو سپیسی فائی کرنا ہے تو اس کو ہافن کا استعمال کریں، یوآرایل کے اندر اپ نے انڈرسکور کا استعمال نہیں کرنا کیونکہ آ پ نے سرچ انجن اور یوزر فرینڈلی یوآر ایل بنانا ہے
———————
ایک پیج پر ٹیگ لمٹ
——————–
ٹائیٹل : 70 Characters
میٹا کی ورڈز : 140 Characters
میٹیا ڈسکرپشن : 140 Characters
ہیڈنگ:
H1 (ایک بار)
H2 (دو بار)
H3
H4
H5
H6

بولڈ : دو بار استعمال کر سکتے

ہائپر لنک : 70 Characters

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں