Wednesday, April 17, 2024
Homeاسلامنعت شریفعاصیوں کو دَر تمہارا مل گیا​

عاصیوں کو دَر تمہارا مل گیا​

عاصیوں کو دَر تمہارا مل گیا​
بے ٹھکانوں کو ٹھکانا مل گیا​

​فضلِ رب سے پھر کمی کس بات کی​
مل گیا سب کچھ جو طیبہ مل گیاگی

کشف رازِ مر رآنی یون ہوا
تُم ملے تو حق تعالٰی مل گیا


​اُن کے دَر نے سب سے مستغنی کیا​
بے طلب بے خواہش اِتنا مل گیا​

​ناخدائی کے لیے آئے حضور​
ڈوبتو نکلو سہارا مل گیا​

​دونوں عالم سے مجھے کیوں کھو دیا​
نفسِ خود مطلب تجھے کیا مل گیا​

​خلد کیسا کیا چمن کس کا وطن​
مجھ کو صحراے مدینہ مل گیا​

​آنکھیں پُرنم ہو گئیں سر جھک گیا​
جب ترا نقشِ کفِ پا مل گیا​

​ہے محبت کس قدر نامِ خدا​
نامِ حق سے نامِ والا مل گیا​

​اُن کے طالب نے جو چاہا پا لیا​
اُن کے سائل نے جو مانگا مل گیا​

​تیرے دَر کے ٹکڑے ہیں اور میں غریب​
مجھ کو روزی کا ٹھکانا مل گیا​

​اے حسن فردوس میں جائیں جناب​
ہم کو صحراے مدینہ مل گیا

Aasiyon Ko Dar Tumhara Mil Gaya – Naat Lyrics In Urdu

Aasiyon Ko Dar Tumhara Mil Gaya

Be Thikano Ko Thikana Mil Gaya

Fazle Rab Se Fir Kami Kis Baat Ki

Mil Gaya Sab Kuchh Jo Tayba Mil Gaya

Kashf-E-Roze Mar Rahani Yu Hua

Tum Mile To Haq Ta’ala Mil Gaya

Unke Darne Sabse Mustagni Kiya

Be Talab Be Khvahish Itna Mil Gaya

Na-Khudai Ke Liye Aae Huzur

Dubato Niklo Sahara Mil Gaya

Ankhe Purnam Hogai Sar Juk Gaya

Jab Tera Naksh-E-Kaf E Pa Mil Gaya

Khuld Kesa Kya Chaman Kiska Vatan

Mujko Sehra-E-Madina Mil Gaya

Unke Talib Ne Jo Chaha Paliya

Unke Saeel Ne Jo Manga Mil Gaya

Tere Darke Tukde Hai Aur Mein Garib

Mujko Rozi Ka Thikana Mil Gaya

Ae Hassan Firdous Main Jayain Janab

Ham Ko Sehra-E-Madina Mil Gaya

Aasiyo Ko Dar Tumhara Mil Gaya

Be Thikano Ko Thikana Mil Gaya

متعلقہ مضامین

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

متعلقہ